پاکستان سے تعاون جاری رہے گا، سیلاب متاثرین کیلئے امداد 20 کروڑ ڈالر تک بڑھادی: امریکا 

20

 

واشنگٹن : ترجمان امریکی دفتر خارجہ نے کہا ہے کہ پاکستان میں سیلاب سے متاثرہ علاقوں کی بحالی اور تعمیر نو کے لیے دس کروڑ ڈالر کی اضافی امداد دی جا رہی ہے۔ اس طرح کُل فنڈنگ 200 ملین ڈالر ہو جائے گی۔

 

واشنگٹن میں ترجمان نیڈ پرائس نے پریس بریفنگ میں بتایا کہ پاکستان میں گزشتہ برس کے تباہ کن سیلاب کے بعد سے امریکی حکومت انتظامیہ کے ساتھ مل کر بحالی میں معاونت، فوڈ سکیورٹی، آفات سے نمٹنے کی تیاری اور استعداد میں اضافے پر کام کر رہی ہے۔بحالی اور تعمیر نو کے لیے مزید 100 ملین ڈالر کا اعلان کر کے امریکا نے اپنی کُل امداد کو 200 ملین ڈالر تک پہنچا دیا ہے۔

 

ترجمان کا کہنا تھا کہ یہ 100 ملین ڈالر سیلاب سے بچاؤ، گورننس، بیماریوں کے پھیلاؤ کی روک تھام، معاشی ترقی و صاف توانائی، موسمی زراعت، فوڈ سکیورٹی اور انفراسٹرکچر کی تعمیرنو پر خرچ کیے جائیں گے۔اس فنڈنگ کے ذریعے کیمیپوں یا دیگر علاقوں میں پناہ لیے ہوئے سیلاب متاثرین کی بحالی میں بھی معاونت کی جائے گی۔

 

ترجمان نیڈ پرائس نے کہا کہ سیلاب سے متاثرہ پاکستان کی بحالی اور تعمیر نو کی کوششوں میں امریکی معاونت جاری رہے گی اور مستقبل میں بھی وہاں کے عوام کے لیے موسمیاتی تبدیلیوں سے نمٹنے میں مدد کی جائے گی۔

 

ترجمان نے مزید کہا کہ پاکستان کی جہاں بھی ترجیحات ہوں گی ان میں امریکا شراکت داری جاری رکھے گا چاہے وہ سکیورٹی، معاشی، یا سیلاب زدگان کے لیے انسانی امداد فراہم کرنا کا معاملہ ہو۔

تبصرے بند ہیں.