روس کی سلامتی کے دفاع و تحفظ کیلئے یوکرین پر قبضہ کرنا ناگزیر تھا، پیوٹن

66

ماسکو: روسی صدر ولادیمیر پیوٹن کا کہنا ہےکہ یوکرین میں جاری صورت حال ہنگامی اقدام ہے اور اگر یہ اقدام نہ کرتے تو روس کی سلامتی خطرے سے دوچار ہوتی۔

عرب میڈیا کے مطابق ماسکو میں کاروباری شخصیات سے خطاب میں پیوٹن کا کہنا تھا کہ ہم بین الاقوامی اقتصادی نظام کا حصہ ہیں اور اسے نقصان پہنچانے کا سوچ نہیں سکتے جبکہ عالمی شراکت دار ہماری مجبوری کو سمجھنے کی کوشش کریں۔

روسی صدر کا کہنا تھا کہ صورت حال مشکل ہے تاہم مل کر مؤثر انداز میں کام کیا جا سکتا ہے جبکہ مغربی دنیا نے کوئی آپشنز نہیں چھوڑے اور روس عالمی اقتصادی نظام کا حصہ بنا رہے گا۔

ولادیمیر پیوٹن کا کہنا تھا کہ روس کی سلامتی کے دفاع و تحفظ کے لیے یوکرین پر قبضہ کرنا ناگزیر تھا، روس نے پابندیوں سے نمٹنے کےلیے تیاری پہلے ہی کرلی تھی۔

دوسری جانب روسی وزارت دفاع کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ یوکرین کے ائیر ڈیفنس کو تباہ کر دیا گیا ہے۔

روسی وزارت دفاع کا کہنا ہے کہ یوکرین کی ائیر بیسز کا انفراسٹرکچر ناکارہ بنا دیا گیا ہے۔

تبصرے بند ہیں.