مسئلہ کشمیر و فلسطین کے حل تک اقوام متحدہ کے قیام کے مقاصد پورے نہیں ہوں گے:شہباز

4

 

لاہور: پاکستان مسلم لیگ (ن) کے صدر اور قائد حزب اختلاف شہبازشریف نے یوم یک جہتی کشمیر پر کشمیری شہدا کو سلام پیش کیا ہے کہتے ہیں تنازع جموں وکشمیر کے منصفانہ حل کے بغیر جنوبی ایشیا میں پائیدار امن و ترقی کا خواب پورا نہیں ہوسکتا ۔5 اگست 2019 کے غیرقانونی اور یک طرفہ بھارتی اقدامات عالمی قانون، اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں کی خلاف ورزی ہیں۔

 

انہوں نے یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر اپنے بیان میں کہا کہ عالمی برادری بھارت کو انسانی حقوق کی سنگین اور منظم پامالیوں، عالمی قانون کی خلاف ورزیوں پر جوابدہی کے کٹہرے میں کھڑا کرے۔ سلامتی کونسل کی قراردادوں اور کشمیریوں کی خواہشات کے مطابق تنازع جموں وکشمیر حل کرایا جائے ۔ آج کا دن اقوام متحدہ، سلامتی کونسل اور عالمی برادری سے تقاضا کرتا ہے کہ وہ اپنی قانونی، جمہوری اور انسانی ذمہ داریاں پوری کریں ۔

 

انہوں نے کہا کہ یوم یک جہتی کشمیر پاکستانی عوام کے جموں وکشمیر کے اپنے بھائیوں بہنوں کی حمایت جاری رکھنے کے عزم کا دن ہے ۔ جموں وکشمیر کے عوام نے استصواب رائے کے حق کے حصول اور بھارتی قبضے سے نجات کے لیے تاریخی جدوجہد کی ہے ۔

 

شہباز شریف کا کہنا تھا کہ نسل درنسل کشمیریوں کی شہادتیں ان کے آزادی سے کم کچھ نہ قبول کرنے کے آہنی عزم کا مظہر ہیں ۔کشمیری شہداءکو سلام عقیدت پیش کرتے ہیں ۔  عوام کی حقیقی قیادت کو ان کی ثابت قدمی پر خراج تحسین پیش کرتے ہیں ۔فلسطین اور جموں وکشمیر کے تنازعات اقوام متحدہ، سلامتی کونسل اور عالمی برادری کے لئے دوبڑے چیلنج ہیں ۔

 

انہوں نے کہا کہ دیرینہ ترین تنازعات کے حل تک اقوام متحدہ کے قیام کے بنیادی مقاصد پورے نہیں ہوں گے ۔اقوام متحدہ کو اپنی ساکھ کی بحالی کے لئے جموں وکشمیر اور فلسطین کے تنازعات کا منصفانہ حل یقینی بنانا ہوگا۔

تبصرے بند ہیں.