آرمینیا اور آذربائیجان کے درمیان پھر جھڑپیں، 15 آرمینیائی فوجی ہلاک

58

باکو: آرمینیا اور آذربائیجان کے درمیان ایک سال کے وقفے کے بعد پھر سرحدی جھڑپیں ہو گئیں۔ جھڑپوں میں 15 آرمینیائی فوجی ہلاک ہو گئے۔ 

 

غیرملکی خبر ایجنسی کے مطابق آرمینیا اور آذربائیجان کی جانب سے ایک دوسرے پر حملے کا الزام عائد کیا گیا ہے۔ تاہم مشرقی سرحد پرآرمینیا اور آذربائیجان کی افواج کے درمیان جھڑپوں میں 15 آرمینیائی فوجی ہلاک ہوئے۔

 

آرمینین حکام کے مطابق آذری فوج نے 12 آرمینیائی فوجیوں کو گرفتار کر لیا ہے جبکہ آرمینیائی وزارت دفاع نے کہا ہے کہ سرحدی جھڑپ میں آذری فوج کی جانب سے توپخانے، چھوٹے ہتھیاروں کا استعمال کیا گیا۔

 

رپورٹس کے مطابق آذری فوج نے جھڑپوں کے دوران 2 سرحدی چیک پوسٹیں بھی آرمینیائی قبضے سے چھڑا لی ہیں۔

 

دوسری جانب آرمینیا نے روس سے مدد کی درخواست کی اور زور دیا کہ روس 1987 کے دفاعی معاہدے کے تحت آرمینیا کے علاقوں کا دفاع کرے۔

 

یاد رہے کہ گزشتہ سال بھی نگورنو کاراباخ کے معاملے پر روس نے آرمینیااورآذربائیجان کے درمیان ثالثی کرائی تھی۔

تبصرے بند ہیں.