سعودی عرب نے 25 جولائی سے عمرے کی اجازت دیدی

290

ریاض: سعودی عرب نے 25 جولائی سے عمرے کی اجازت دیدی ، سعودی وزیر برائے حج کا کہنا ہے کہ یومیہ 20 ہزار عمرہ زائرین کو اجازت نامے جاری کیے جائیں گے ۔

نائب وزیر حج کے اعلان کے مطابق ، عمرہ زائرین کی تعداد میں بتدریج اضافہ کیا جائے گا ، سعودی عرب میں نماز کے اوقات میں بھی دکانیں اور کاروبار جاری رکھنے کی اجازت دے دی گئی ہے ۔

سعودی ایوان صنعت و تجارت کا کہنا ہے کہ کورونا احتیاطی تدابیر پر عمل درآمد کرتے ہوئے شہریوں کو انتظار سے بچانے کے لیے دکانیں کھلی رکھیں ۔

واضح رہے کہ مناسک حج کی ادائیگی کا آغاز ہو گیا ہے ۔ خیموں کی بستی منیٰ میں قیام کے لیے عازمین آج پہنچیں گے ۔ مکہ مکرمہ کی انتظامیہ نے تمام انتظامات مکمل کر لئے ہیں ۔

سعودی عرب میں مقیم 60 ہزار ملکی اور غیر ملکی شہری حج کی سعادت حاصل کر رہے ہیں ۔ منیٰ سے میدان عرفات اور مزدلفہ کے لیے پیدل روانگی کے بجائے خصوصی بس سروس چلائی جائے گی ۔ پیر کو رکن اعظم وقوف عرفہ اور مسجد نمرہ میں خطبہ حج دیا جائے گا ۔

میدان عرفات سے حج کا خطبہ شیخ عبداللہ المنیع دیں گے ۔ خطبہ حج کو اردو سمیت 10 زبانوں میں پیش کیا جائے گا ۔

سعودی عرب کے مختلف شہروں سے عازمین حج کے قافلے مکہ مکرمہ پہنچ چکے ہیں ۔ جبکہ جدہ سے عازمین کی آمد کا سلسلہ اتوار سے شروع ہوگا ۔

وزارت حج و عمرہ کے ترجمان انجینئر ہشام سعید کے مطابق عازمین حج کے پہلے قافلے نے حرم مکی میں طواف قدوم کیا ۔

انہوں نے کہا ہے کہ حرم مکی میں داخلے سے قبل النواریہ، الزایدی، الشرائع اور الہدا مراکز میں عازمین کا استقبال کیا گیا۔ وہاں سے وہ طواف قدوم کے لیے مسجد حرام کی طرف روانہ ہوئے ۔

حرم مکی میں آمد سے قبل چھ ہزار عازمین پر مشتمل گروپس تشکیل دیئے گیے جو ہر تین گھنٹے بعد طواف قدوم کے لیے مسجد الحرام روانہ کئے جا رہے ہیں ۔

 

 

 

 

 

 

 

تبصرے بند ہیں.