146 ادویات کی قیمتوں میں اضافہ، نگران حکومت کا نوٹیفکیشن چیلنج

44

لاہور: نگراں حکومت نے جان بچانے والی 146 ادویات کی قیمتیں بڑھانے کا نوٹیفکیشن جاری ہو گیا۔ لاہور ہائیکورٹ میں شہری نے ادویات کی قیمتوں کے تعین کا نوٹیفکیشن چیلنج کر دیا۔

 

کینسر، ویکسین اور اینٹی بائیوٹک دواؤں کی قیمتیں بڑھائی گئی ہیں۔

ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی نے حکومت کو262 ادویات کی قیمتیں بڑھانےکی سمری بھیجی تھی۔

 

اس حوالے سے حکام کا کہنا ہے کہ حکومت نے لسٹ میں شامل جان بچانے والی 146 ادویات کی قیمتوں میں اضافہ کیا،  لسٹ میں شامل 116 ادویات کی قیمتیں فارماسیوٹیکل کمپنیاں خود بڑھائیں گی۔

 

حکام نے کہا کہ حکومت اب صرف نیشنل اسینشل میڈیسنز لسٹ میں شامل 464 ادویات کی قیمتوں پر کنٹرول رکھے گی۔

 

حکومت نے گزشتہ روز ادویات کی قیمتیں ڈی ریگولیٹ کر کے فارماسیوٹیکل کمپنیوں کو قیمتیں از خود بڑھانے کی اجازت دی تھی۔

 

دوسری جانب ادویات کی قیمتوں کے تعین کے نوٹیفکیشن کیخلاف لاہور ہائیکورٹ میں درخواست دائر کر دی۔

 

شہری محمد اسلم نے درخواست میں نشاندہی کی کہ ادویات کی قیمتیں مقرر کرنے کے لیے نگران حکومت نے قانون کے منافی نوٹیفکیشن جاری کیا گیا ہے اور اس نوٹیفکیشن کے اجرا کے بعد  ادویات کی قیمتوں میں اضافہ ہوگا.

 

درخواست میں بتایا گیا کہ حکومت نے ادویات کی قیمتیں مقرر کرنے کی سیکشن ڈرگ ایکٹ سے نکال رہی ہے اور ایسا کرنے کا اختیار نگران حکومت کے پاس نہیں ہے.

 

اس لیے نگران حکومت کے فیصلہ کالعدم قرار دیا جائے اور درخواست کے حتمی فیصلے تک نوٹیفکیشن معطل کر دیا جائے.

تبصرے بند ہیں.