اسلحہ برداروں اور تشدد میں ملوث افراد سے سختی سے نمٹیں: چیف الیکشن کمشنر کا لاہور واقعہ کا نوٹس 

21

 

لاہور : چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجہ نے پنجاب اسمبلی کے حلقے پی پی 167 لاہور میں پی ٹی آئی اور ن لیگ کے کارکنوں کے درمیان فائرنگ کے تبادلے اور ایک دوسرے پر تشدد کا نوٹس لے لیا ہے۔

 

چیف الیکشن کمشنر نے سیکرٹری الیکشن کمیشن کو آئی جی پنجاب سے رابطہ کرنے کی ہدایت کی اور کہا کہ آئی جی پنجاب بلاتفریق ملزمان کی گرفتاری یقینی بنائیں۔ آئی جی پنجاب شفاف انکوائری کروا کر رپورٹ الیکشن کمیشن کو پیشں کریں۔

 

چیف الیکشن کمشنر کا کہنا تھاکہ آئی جی پنجاب اور انتظامیہ گن کلچر اورتشدد میں ملوث عناصر سے سختی سے نمٹیں۔ ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر سخت کارروائی کا حکم بھی دیا۔

 

دوسری جانب ڈسٹرکٹ مانیٹرنگ آفیسر نے پی ٹی آئی کے شبیرگجر اور ن لیگ کے نذیر چوہان کو ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پرنوٹس جاری کردیا۔

 

دونوں امیدواروں کو کل ڈی آر او کے سامنے پیش ہونے کا حکم دیا گیا ہے۔ الیکشن کمیشن کے مطابق ڈسٹرکٹ مانیٹرنگ افسر نے نذیر چوہان کو 12 بجے دوپہر اورشبیر گجر کو 3 بجے سہ پہر دفتر طلب کیا ہے، پیش نہ ہونے کی صورت میں عدم موجودگی میں فیصلہ کیا جائے گا۔

 

خیال رہے کہ لاہور میں صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی پی167 پر ضمنی انتخاب کی مہم کے دوران مسلم لیگ ن اور پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے امیدواروں نے ایک دوسرے پر حملے کا الزام لگایا ہے ۔ واقعہ میں 12 سے زائد افراد زخمی ہوئے ۔

 

تبصرے بند ہیں.