ریٹائرڈ میجر کے گھر زبردستی گھسنے پر فائرنگ سے پولیس اہلکار شہید ہوا: فواد چوہدری

58

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنماءاور سابق وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے کہا ہے کہ ریٹائرڈ میجر کے گھر میں آدھی رات کو زبردستی داخل ہونے پر گھر والوں نے ڈاکو سمجھ کر فائرنگ کر دی۔ 
تفصیلات کے مطابق فواد چوہدری نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری پیغام میں لکھا ’ایکس سروس مین اور سول اداروں سے ریٹائرڈ لوگ بھی پولیس گردی کا نشانہ بنے، اطلاعات کے مطابق ریٹائرڈ میجر کے گھر میں آدھی رات کو زبردستی داخل ہونے پر گھر والوں نے ڈاکو سمجھ کر فائر کر دیا اور پولیس اہلکار جان کی بازی ہار گیا، ان تمام واقعات کے ذمہ دار حمزہ اور رانا ثناءاللہ ہیں۔‘ 

ایک اور ٹویٹ میں انہوں نے لکھا ’ پنجاب میں رات گئے 1100 گھروں پر چھاپے مارے گئے، بغیر وارنٹ گھروں میں داخل ہو کر پولیس نے خواتین حتیٰ کہ بچوں سے بدتمیزی کی، لوگوں کو تشدد کا نشانہ بنایا گیا، چار سو سے زائد کارکن حراست میں لئے گئے، ان میں خواتین بھی شامل ہیں۔‘ 

فواد چوہدری کا مزید کہنا تھا ’پنجابیوں ڈٹ جاﺅ! اس حکومت کو پتہ نہیں کوئی ماں کا لعل پنجاب کے جذبوں کو نہیں دبا سکتا، پنجابیوں کے جذبے پانچ دریاﺅں کی ٹھاٹھیں مارتے موجوں سے پانی لے کر جوان ہوئے ہیں، بزدلوں کا خیال ہے بندوقوں سے پنجابی ڈر جائے گا، اس غلطی کی بڑی قیمت دینا ہو گی۔‘ 

تبصرے بند ہیں.