9 مئی کیسز: شیخ رشید احمد، زرتاج گل سمیت 59 ملزمان پر23 اپریل کو فرد جرم عائد کرنے کی کارروائی کی جائے گی

14

راولپنڈی: انسداد دہشتگردی عدالت راولپنڈی میں شیخ رشید احمد، زرتاج گل، واثق قیوم سمیت 59 ملزمان کو چالان کی نقول فراہم  کر دیں گئیں۔ آئندہ سماعت پر فرد جرم عائد کرنے کی کارروائی کی جائے گی۔

 

راولپنڈی کی انسداد دہشتگردی عدالت کے جج ملک اعجاز اصف نے سانحہ 9 مئی کے 3 تھانوں میں درج مقدمات کی سماعت کی۔ شیخ رشید احمد، زرتاج گل اور صداقت عباسی، کرنل اجمل صابر، چوہدری ساجد و دیگر اپنے وکلاء کے ہمراہ عدالت پیش ہوئے۔

 

سماعت کے آغاز پر عدالت نے ٹیکسلا، مورگاہ، کینٹ کے مقدموں کے تفتیشی افسران کو چالان کی نقول پیش کرنے کا حکم دیا اور مقدموں میں دہشت گردی کی دفعات پر سوالات اٹھائے۔

 

آج کی سماعت میں تمام ملزمان کو چلان نقول فراہم کرتے ہوئے۔ فرد جرم کی کاروائی کیلئے سماعت 23 اپریل تک ملتوی کردی۔

 

سماعت کے بعد میڈیا سے گفتگو میں شیخ رشید احمد کا مزید کہنا تھا کہ ہمارے خلاف نو مئی کے 17 کیسز چل رہے ہیں۔گیارہ کیسز دہشتگردی عدالت میں ہیں۔ہماری خاموشی رنگ لائے گی۔ حکومت جنہوں نے چلانی ہے انہوں نے ہی چلانی ہے ۔ہم چاہتے ہیں غریب کا چولہا جلے۔ پاکستان کو آگے جانا چاہیئے آج غریب کی حالت بہت خراب ہے۔

 

27 رمضان المبارک کو مقتدر حلقے غریب اور بیگناہ لوگوں کیلئے معافی کا اعلان کریں۔ بہت پہلے کہا تھا کہ ن میں سے ش نکلے گی۔ نواز شریف کی سیاست کی جگہ شہباز شریف نے لی ہے۔ اب شہباز شریف کی سیاست چلے گی نواز شریف کی نہیں۔

تبصرے بند ہیں.