میں ہوتا تو نواز شریف کو وکٹری سپیچ سے منع کرتا، جب پی پی چاہے گی حکومت گر جائے گی: شاہد خاقان عباسی

20

 

اسلام آباد : سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ یہ ڈیلی ویجز کی حکومت بن جائے گی  جب پیپلز پارٹی کو بات پسند نہ آئی تو حکومت کی چھٹی ہو جائے گی۔

 

نجی ٹی وی کے پروگرام میں  گفتگو کرتے ہوئے شاہد خاقان نے کہا کہ الیکشن سے پہلے آگے کے راستہ کا تعین نہیں کریں گے تو مزید انتشار پھیلے گا، ہم نے ابھی تک فیصلہ نہیں کیا کہ الیکشن میں خرابیاں کیسے دور کرنی ہیں ، یہ حکومتیں ایک دن رہے یا 5سال اس سے فرق نہیں پڑے گا بلکہ ان حکومتوں کے لیے پرفارم کرنابہت مشکل ہوگا۔

 

انہوں نے کہا کہ جو الیکشن لڑتے ہیں انہیں پتہ ہوتا ہے کہ وہ جیتے یا ہارے ، جو لوگ اسمبلیوں میں بیٹھے ہوتے ہیں انہیں ہر چیز کا پتہ ہوتا ہے ، جو لوگ جیتے بغیر اسمبلیوں میں بیٹھیں گے وہ کام نہیں کر پائیں گے ، اور جو لوگ الیکشن درست نہیں کرا سکتے اس ملک کا نظام بھی نہیں چل سکتا ۔

 

 

سابق وزیراعظم کا کہنا تھا کہ مجھے نہیں پتہ کہ نواز شریف نے وکٹری اسپیچ کیوں کی ، اگر میں وہاں ہوتا تو میں ضرور مشورہ دیتا کہ وہ یہ اسپیچ نہ کریں ،اب ہم سب دعا ہی کر سکتے ہیں کہ جو حکومت آئےوہ ڈیلیور کر سکے۔

 

 

تبصرے بند ہیں.