ایم ایل ون منصوبے پر پیش رفت، پاکستان اور چین کے درمیان فنانسنگ کے معاملات طے :دستخط اگست کے پہلے ہفتے میں ہونے کا امکان

46

اسلام آباد :پاکستان اور چین کے درمیان ایم ایل 1 منصوبہ کی فنانسنگ کے معاملات طے پا گئے ہیں۔ ایم ایل ون منصوبہ پر پیش رفت ہوئی ہے اور پاکستان اور چین کے درمیان ایم ایل 1 منصوبہ کی فنانسنگ کے معاملات طے پا گئے ہیں ۔

 

ذرائع کے مطابق ایم ایل1 منصوبے پر دستخط اگست کے پہلے ہفتے میں ہونے کا امکان ہے۔مجوزہ ایگریمنٹ کے تحت ایم ایل ون منصوبے پر 6 ارب 50 کروڑ ڈالرز لاگت آئے گی۔ منصوبہ کی لاگت ساڑھے 8 ارب ڈالرز سے کم کر کے ساڑھے 6 ارب ڈالرز کی گئی ہے۔

 

پاکستان کی طرف سے منصوبے کی لاگت کم کرنے پر زور دیا گیا تھا۔ منصوبے کی کل لاگت کا 15 فیصد پاکستان مہیا کرے گا۔ منصوبے کے تحت کراچی سے پشاور 1733 کلومیٹر ریلوے ٹریک اپ گریڈ اور دورویہ کیا جائے گا، ریلوے ٹریک کے ساتھ سگنلز اور ٹیلی کام کا جدید ترین نظام نصب کیا جائے گا۔

ذرائع کے مطابق ابتدائی طور پر پشاور سے کراچی کے درمیان ٹریک پر ریل گاڑیاں 140 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے چلائی جائیں گی، منصوبے کی لاگت کم کرنے کے لئے مکمل ٹریک کے گرد باڑ لگانے کا پروگرام موخر کر دیا گیا۔صرف آبادی والے علاقوں میں ریلوے ٹریک کے گرد باڑ لگائی جائے گی۔

منصوبے میں تبدیلی کر کے پہلے مرحلہ میں جہاں آبادی ہو وہاں پھاٹک ختم کر کے اوورہیڈ برجز بنائے جائیں گے۔ایم ایل ون کے فریم ورک پر پاکستان اور چین نے مئی 2017 میں دستخط کئے تھے، ایکنک نے منصوبے کے پی سی ون کی اگست 2020ء میں منظوری دی تھی۔

تبصرے بند ہیں.