افرادی قوت کی شدید کمی، بیرون ملک ملازمت کے خواہ پاکستانیوں کے لئے برطانیہ سے بڑی خبرآ گئی

49

واشنگٹن: برطانیہ کو ان دنوں افرادی قوت کی شدید کمی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے، اسی کمی کو پورا کرنے کے لیے برطانیہ نے پاکستان سمیت دنیا بھر سے ہنر مندوں کے لیے امیگریشن کے دروازے کھول دیے ہیں۔

رپورٹس کے مطابق پہلی دفع امیگریشن میں 226 کیٹیگریز کو شامل کیا گیا ہے اور برطانیہ میں تمام کیٹیگریز کے لئے کم از کم اجرت میں بھی اضافہ کر دیا گیا ہے۔

 

سرکاری مراسلے کے مطابق امیگریشن کیٹیگری میں پہلی مرتبہ پولیس افسران، صحافیوں، ججوں، خفیہ افسران، بیرسٹروں، وکلا اور فلائٹ پائیلٹس بھی شامل ہیں ،افرادی قوت کی کمی کی کیٹیگری میں موسیقار، ڈانسر، ڈاکٹرز، اداکار اور سائنس دانوں سمیت مزید 31 کیٹیگریز  بھی مختص کی گئی ہیں۔

ڈرائیورز، انسٹرکٹرز، ریلوے اسٹیشن اسسٹنٹس، ائیرہوسٹس، کیبن کریو، وٍٹرنری ڈاکٹرز، درزی بھی برطانیہ منتقل ہوسکیں گے جبکہ مستری مزدور، ائیرکرافٹ انجینئرز، اے سی فریج انجینئرز،ویلڈرز، چیریٹی افسران اور اسٹیٹ ایجنٹس کیلئے بھی مواقع ہیں ۔

 

سرکاری مراسلے میں کہا گیا ہے کہ برطانیہ میں موجود طلبہ،تعلیم کے بعد کام کرنے والی سہولت سے فائدہ اٹھا سکتے ہیں،  اعلیٰ تعلیم یافتہ ہنر مندوں کے لیے تنخواہوں میں 20 فیصد اضافہ ہوگا

تبصرے بند ہیں.