سیاستدانوں کو فوج کے معاملات میں مداخلت نہیں کرنی چاہیے: چودھری شجاعت 

10

لاہور: پاکستان مسلم لیگ  کے قائد چودھری شجاعت حسین   نے کہا ہےکہ مناسب ہو یا غیر مناسب سیاستدانوں کو فوج کے معاملات میں دخل اندازی کرنی چاہیے نہ ہی سیاستدان فوج کو سیاسی الجھنوں میں نہ ڈالیں اس سے ہمارے ملکی مفاد کو نقصان پہنچنے کا خطرہ ہوتا ہے۔

 

چودھری شجاعت حسین نے اپنےبیان میں کہا کہ  سیاستدانوں کو فوج کے معاملات میں دخل اندازی سے فائدہ پاکستان کے دشمن عناصر اٹھا سکتے ہیں۔اب تو ٹی وی ڈراموں میں فوج کے کمانڈوز کے نام لے کر ڈرامے کیے جا رہے ہیں ۔

 

انہوں نے کہا کہ شادیوں میں بھنڈ بھی بیٹھے ہوئے افراد کے سامنے آ کر پتا کرتے ہیں کہ ان میں فوجی کون ہے۔وہ جنرل ہو یا نہ ہو تالیاں بجا کر اشارہ کر کے ایک دوسرے کو کہتے ”بھاگ لگے رہن سانوں وی کجھ دیو“۔

 

چودھری شجاعت حسین  نے مزید کہا کہ ٹی وی اور اخبارات میں فوجی افسروں کے متعلق برادری ازم کو موضوع بنا کر گفتگو کی جاتی ہے۔فوج سمیت کسی بھی طبقے کو تنقید کا نشانہ نہیں بنانا چاہئے۔ہم سب سیاستدانوں کو اس روش کو ختم کرنے کا عہد کرنا چاہیے۔

تبصرے بند ہیں.