اسرائیل کا ایرانی جوہری تنصیبات پر حملہ کرنے کا منصوبہ تیار

201

تل ابیب : اسرائیل کے عسکری اداروں نے اہم اجلاس کے دوران ایران کی جوہری تنصیبات پر حملے کرنے کے بارے میں غور کیا ۔

 

اسرائیلی اخبار کے مطابق اسرائیلی سکیورٹی اداروں نے اجلاس کے دوران کہا ہے کہ اس بات کا امکان ہے کہ اسرائیل ایران کے جوہری پروگرام کو ناکام بنانے کیلئے تہران کی جوہری تنصیبات پر بمباری کرے۔

 

رپورٹ میں کہا گیا کہ ایران کے جوہری پروگرام کی وجہ سے اسرائیل کو درپیش خطرات کا سنجیدگی سے جائزہ لیا گیا۔ اس موقع پر اسرائیلی سیکیورٹی اداروں نے اس بات پر اتفاق کیا کہ ضرورت پڑنے پرایران کے جوہری مراکز پر حملے کیے جا سکتے ہیں ۔

 

اہم اجلاس کی صدارت اسرائیلی آرمی چیف آویف کوخافی نے کی۔ رپورٹ کے مطابق ایرانی جوہری تنصیبات پر ممکنہ حملوں کی کارروائی وزیر دفاع بنی گینٹز، وزیر خارجہ اور وزیر خزانہ کی موجودگی میں ہوگی۔

 

بین گینٹز نے اجلاس کے دوران فوجی بجٹ بڑھانے پر زور دیا اور کہا کہ ایران کو اس کے جوہری پروگرام پرآگے بڑھنے سے روکنے کے لیے جوہری تنصیبات پر حملے کرنا پڑیں گے اور اس کے لیے فوج کو اضافی بجٹ کی ضرورت ہے۔

تبصرے بند ہیں.