چیئرمین پی اے سی کیلئے حکومت اور اپوزیشن میں اتفاق نہ ہوسکا، تاریخ میں پہلی بار چیئرمین پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کے لیے ووٹنگ کرائے جانے کا امکان

72

اسلام آباد: حکومت اور اپوزیشن کے درمیان قومی اسمبلی کی پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کے چیئرمین پر اتفاق نہ ہوسکا۔ ذرائع کے مطابق تاریخ میں پہلی بار چیئرمین پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کے لیے ووٹنگ کرائے جانے کا امکان ہے، ووٹنگ کی صورت میں چیئرمین پی اے سی کا عہدہ پیپلزپارٹی کو دیے جانے پر غور ہورہا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہےکہ  پی اے سی میں حکومت کے 16 اور اپوزیشن بشمول سنی اتحاد کونسل کے  8 ارکان ہونے کا امکان ہے، ووٹنگ ہونے کی صورت میں حکومتی رکن با آسانی چیئرمین پی اے سی بن سکتا ہے۔

ذرائع  کے مطابق  قانون میں کہیں درج نہیں کہ چیئرمین پی اے سی اپوزیشن سے ہوگا مگر ماضی میں کبھی چیئرمین پی اے سی کے عہدے کے لیے ووٹنگ نہیں ہوئی۔
یاد رہے کہ سنی اتحاد کونسل نے شیخ وقاص اکرم کو چئیرمین پی اے سی کے لیے نامزد کررکھا ہے۔

تبصرے بند ہیں.