کراچی اب مجرموں کا شہر بنتا جا رہا ہے، دیرینہ مسائل کے حل کے لیے آواز بلند کرنا پڑے گی: کامران ٹیسوری

14

کراچی: گورنر سندھ کامران ٹیسوری کا کہنا ہے کہ کراچی اب مجرموں کا شہر بنتا جا رہا ہے، دیرینہ مسائل کے حل کے لیے آواز بلند کرنا پڑے گی۔  کامران ٹیسوری نے کورنگی ایسوسی ایشن آف ٹریڈ اینڈ انڈسٹری(کاٹی) کی جانب سے اپنے اعزاز میں منعقد تقریب سے خطاب میں کہا کہ کراچی اب مجرموں کا شہر بنتا جا رہا ہے، دیرینہ مسائل کے حل کے لیے آواز بلند کرنا پڑے گی۔

گورنر سندھ کامران خان ٹیسوری کا کہنا تھا کہ کراچی اب کاروباری مرکز اور روشنیوں کا شہر نہیں رہا ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ دیرینہ مسائل کی وجہ سے کراچی کے لوگ اب جذبے کے ساتھ کام نہیں کررہے۔ گورنر ہاؤس سندھ کا آئی ٹی پروگرام ملک بھر میں مقبول ہورہا ہے۔ گورنر ہاؤس کا روزگار قرض پروگرام بھی کامیابی کے ساتھ چل رہا ہے۔

ان کامزید کہنا تھا کہ گورنر ہاؤس میں 50 ہزار بچوں کی آئی ٹی کے ساتھ کانفیڈنس بلڈنگ بھی کی جارہی ہے۔ مسائل اتنے بڑھ گئے ہیں  کہ دو راستے ہیں یا تو ایسے ہی چلنے دیں یا پھر اسے مکمل درست کریں۔

کامران ٹیسوری کا کہنا تھا کہ آزاد کشمیر میں ایشو بنا وزیراعظم گئے اور ان کو 23 ارب روپے دئیے گئے۔ مسائل کے حل کے لیے کراچی کے لوگوں کو آواز تو اٹھانی پڑے گے۔ ہم میڈیا کے ذریعے وفاق اور صوبوں کوبتاتے ہیں کہ کیا مسائل ہیں۔ گورنر ہاؤس میں ہم جو کام کررہے ہیں وہ تو ایک چھوٹا سا کام ہے۔

تبصرے بند ہیں.