وفاقی حکومت نےعمران خان کیخلاف سائفرکیس کاجیل  ٹرائل کالعدم قرار دینے کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کر دیا

193

 

اسلام آباد: وفاقی حکومت نےعمران خان کیخلاف سائفرکیس کاجیل  ٹرائل کالعدم قرار دینے کا اسلام آباد ہائیکورٹ کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کر دیا۔

 

وفاقی حکومت کی جانب سے دائر درخواست میں کہا گیا ہےکہ ہائیکورٹ نے سائفر ٹرائل کیلئے قائم خصوصی عدالت کوکالعدم قراردیا، ہائیکورٹ کے پاس خصوصی عدالت کی حیثیت ختم کرنے کا اختیار نہیں ہے اور اسلام آباد ہائیکورٹ نے حقائق کا درست جائزہ نہیں لیا۔

درخواست میں استدعا کی گئی ہےکہ اسلام آباد ہائیکورٹ کا 21 نومبر2023 کا فیصلہ کالعدم قرار دیا جائے۔

 

وفاقی حکومت نے درخواست وکیل راجہ رضوان عباسی کے توسط سے دائر کی۔

درخواست میں بانی پی ٹی آئی اور جج ابو الحسنات کو فریق بنایا گیا۔ ڈی جی ایف آئی اے، آئی جی، ڈی سی اور چیف کمشنر اسلام آباد سمیت دیگر کو بھی فریق بنایا گیا ہے۔

 

تبصرے بند ہیں.