کورونا کیسز میں کمی،سندھ میں پرائمری سکول اور درگاہیں کھولنے کا فیصلہ

کراچی : سندھ  نے کورونا کیسز میں کمی پر  پرائمری اسکول 21 جون سے کھولنے کا فیصلہ کیا ہے جبکہ درگاہیں، امیوزمنٹ  پارکس اور انڈورجمز 28 جون کو کھولے جائیں گے۔

وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کی زیر صدارت کورونا وائرس پر صوبائی ٹاسک فورس کا اجلاس ہوا۔ اجلاس میں صوبائی وزراء، ڈاکٹر عذرا پیچوہو، سعید غنی، ناصر شاہ، مشیر مرتضیٰ وہاب، پارلیامینٹری سیکریٹری قاسم سراج سومرو، چیف سیکریٹری، آئی جی پولیس، اے سی ایس ہوم، وزیراعلیٰ سندھ کے پرنسپل سیکریٹری، ایڈیشنل آئی جی کراچی، صوبائی سیکریٹری حسن نقوی، احمد بخش ناریجو، ریاض الدین، ڈاکٹر باری، ڈاکٹر فیصل ، ڈاکٹر سارہ، ڈاکٹر قیصر سجاد اور دیگر متعلقہ افسرا شریک ہوئے۔

اجلاس کو بتایا گیا کہ کورونا وائرس کی تشخیصی شرح 3.9 ہوگئی ہے۔کیسز میں کمی ہور ہی ہے۔ کراچی میں تشخیصی شرح 8.08 اور حیدرآباد 4.3 فیصد ہے۔ہفتہ وار رپورٹ کے مطابق کراچی شرقی 14 فیصد، جنوبی میں 10 فیصد کیسز آئے ہیں۔کراچی سینٹرل 9 فیصد، غربی 8 فیصد، ملیر 7 فیصد ، کورنگی 7 فیصد اور سکھر 7 فیصد کیسز ہیں۔

بریفنگ میں مزید بتایا گیا ہے کہ جون میں 263 کورونا مریض انتقال کرگئے۔ ایئرپورٹ پر آنے والے 42532 مسافر کے ٹیسٹ کئے گئے جن میں 95 مسافر مثبت آئے،۔ابھی تک 3243988 ویکسین  ڈوز موصول ہوئی ہیں۔ جن میں سے  2873857 ڈوزز استعمال ہوچکی ہیں۔

اجلاس کو بتایا گیا کہ سپوتنیک ویکسین جون کے آخری ہفتے میں آجائے گی۔1.5 ملین سائنو ویک کی ڈوزز جون 21 کو آجائیں گی۔کنسائنو کے 7 لاکھ ڈوزز جون 23 کو ملیں گی۔پاک ویک کی 4 لاکھ ڈوزز بھی جون 23 کو ملیں گی۔

وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ یہ کمی تب تک ہوتی رہے گی جب تک عوام ایس او پیز پر عمل کرتے رہیں گے۔ ابھی ضلع شرقی اور ضلع جنوبی میں کیسز بہت زیادہ ہیں۔ویکسین کی کمی کے باعث سے کل ویکسینین پر چھٹی ہوگی ۔

Murad Ali ShahSchoolsSindh government