کراچی بلدیاتی انتخابات میں دھاندلی، جماعت اسلامی کا نیشنل پریس کلب اسلام آباد کے سامنے احتجاج

12

اسلام آباد (شیراز احمد شیرازی) امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق کی کال پر ملک بھر کی طرح نیشنل پریس کلب اسلام آباد کے سامنے بھی احتجاجی مظاہرہ کیا گیا ۔

 

جس کی قیادت امیر جماعت اسلامی شمالی پنجاب ڈاکٹر طارق سلیم نے کی جبکہ نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان وسابق ممبر قومی اسمبلی میاں محمد اسلم ، امیر جماعت اسلامی اسلام آباد نصر اللہ رند ھاوا ، امیر جماعت اسلامی راولپنڈی سید عارف شیرازی ، امیر جماعت اسلامی مری غلام احمد عباسی ، رضا احمد شاہ ، محمد کاشف چوہدری ، جماعت اسلامی یوتھ ونگ کے صدر رسل خان ، صدر پنجاب شمالی اویس اسلم مرزا ، مولانا امیر عثمان نے احتجاجی مظاہرے کے شرکاء سے خطاب کیا ۔

 

اس موقع پر جماعت اسلامی شمالی پنجاب کی نائب ناظمہ نزہت بھٹی ، رخسانہ غضنفر ، ناظمہ ضلع راولپنڈی آنسہ اشفاق ، سابق ممبر قومی اسمبلی عائشہ سید سمیت بڑی تعداد میں مرد و خواتین اور بچوں نے شرکت کی ، مظاہرین نے سندھ حکومت ، پیپلز پارٹی اور الیکشن کمیشن کے خلاف زبردست نعرے بازی کی ۔

 

اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے میاں محمد اسلم نے کہا کراچی میں عوامی مینڈیٹ کو چرانے کی کوشش کی گئی تو بھرپور مزاحمت ہو گی ، کراچی کل بھی جماعت اسلامی کا تھا اور آج بھی جماعت اسلامی کا ہے ۔ انتخابی نتائج میں تاخیر جماعت کا راستہ روکنے کے ہتھکنڈے ہیں ۔ کراچی میں جماعت اسلامی کا ہی میئر منتخب ہو گا ، فتح ملک بھر کے عوام کیلئے روشنی کی امید ہے ۔ تاحال موصول ہونے والے بلدیاتی نتائج پر اللہ کا شکر ادا کرتے ہیں اور کراچی کے قائدین اور کارکنوں کو شاندار کامیابی پر مبارک باد پیش کرتے ہیں ۔

 

میاں محمد اسلم نے کہا حکمرانوں اور فیصلہ سازوں پر واضح کرنا چاہتے ہیں کہ کراچی میں عوامی فیصلہ پر ڈاکہ مت ڈالیں ، کراچی اپنے اصل کی طرف لوٹ رہا ہے ، عوام کو مہنگائی ، غربت اور جہالت کے تحفے دینے والوں کا آئندہ الیکشن میں مکمل صفایا ہوجائے گا ۔

 

ڈاکٹر طارق سلیم نے انتخابی نتائج میں تاخیر اور دھاندلی پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے کہا جماعت اسلامی کراچی کی اکثریتی پارٹی بن کر اُبھری ہے مگر جماعت اسلامی کی اکثریت کو کم کرنے کیلئے آر اوز کے دفاتر میں نتائج تبدیل کیے گئے ہیں ہم حکمرانوں کو خبردار کرتے ہیں کہ اگر جماعت اسلامی کا کراچی میں راستہ روکا گیا تو صوبائی دارالحکومت سمیت ملک بھر میں بھرپور احتجاج ہوگا، اہلیان کراچی نے حافط نعیم الرحمن کو مینڈیٹ دیا ہے ۔ کراچی کل بھی ہمارا تھا کراچی آج بھی جماعت اسلامی کا ہے ۔

 

انھوں نے کہا ریٹرننگ آفیسر اور پولنگ ایجنٹ کیا ان پڑھ تھا جو چند ہزار ووٹوں کو گن کر رزلٹ تیار نہ کر سکا ، ہم سندھ حکو مت کو وارننگ دیتے ہیں کہ وہ جماعت اسلامی کے عوامی مینڈیٹ پر شب خون مارنے سے گریز کرے ۔ اگر جماعت اسلامی کی قیادت حکم دے گی تو الیکشن کمیشن کا گھیراﺅ بھی کریں گے ۔

 

تبصرے بند ہیں.