گورنر پنجاب نے نگران وزیراعلیٰ کی تقرری کیلئے پرویز الٰہی اور حمزہ شہباز کو مراسلہ بھیج دیا

9

لاہور: گورنر پنجاب بلیغ الرحمن نے پنجاب اسمبلی کی تحلیل کے بعد نگران وزیراعلیٰ کی تقرری کے معاملے پر وزیراعلیٰ اور قائد حزب اختلاف کو مراسلہ جاری کر دیا ہے۔ 
تفصیلات کے مطابق گورنر پنجاب بلیغ الرحمن کی جانب سے وزیراعلیٰ پنجاب چوہدری پرویز الٰہی اور قائد حزب اختلاف حمزہ شہباز کو بھیجے گئے مراسلے میں نگران وزیر اعلیٰ کیلئے متفقہ نام طلب کیا گیا ہے۔
گورنر پنجاب کی جانب سے بھیجے گئے مراسلے میں کہا گیا ہے کہ نگران وزیر اعلیٰ کا نام 17 جنوری رات 10 بج کر 10منٹ تک دیدیا جائے۔ 
واضح رہے کہ گورنر پنجاب بلیغ الرحمن کی جانب سے پنجاب اسمبلی کی تحلیل کیلئے بھیجی گئی ایڈوائس پر دستخط سے انکار کے بعد پنجاب اسمبلی ازخود ٹوٹ گئی ہے اور اب نگران وزیر اعلیٰ آنے تک پرویز الہٰی ہی وزیراعلیٰ کا عہدہ سنبھالیں گے۔
یاد رہے کہ 12 جنوری کو وزیر اعلیٰ پنجاب چوہدری پرویز الٰہی نے اسمبلی تحلیل کرنے کی ایڈوائس گورنر کو بھیجی تھی، آئین کے تحت گورنر پنجاب کو 48 گھنٹوں کے اندر سمری پر دستخط کرنے ہوتے ہیں۔
گورنر پنجاب اسمبلی توڑنے کے عمل کا حصہ نہیں بنے اور سمری پر دستخط کرنے سے انکار کرتے ہوئے کہا کہ ایسا کرنے سے آئینی عمل میں کسی قسم کی رکاوٹ کا اندیشہ نہیں، آئین و قانون میں وضاحت کےساتھ تمام معاملات کے آگے بڑھنے کا راستہ موجود ہے۔

تبصرے بند ہیں.