ایم کیو ایم رابطہ کمیٹی اجلاس میں انتخابات میں حصہ لینے کا فیصلہ نہ ہو سکا

7

کراچی: متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) پاکستان کی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں انتخابات میں حصہ لینے کا فیصلہ نہیں ہو سکا جس کے باعث رابطہ کمیٹی کی پریس کانفرنس بھی تاخیر کا شکار ہو گئی ہے۔ 
تفصیلات کے مطابق اجلاس کے بعد ایم کیو ایم کے کنوینر ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی اور دیگر رہنما گورنر ہاؤس روانہ گئے ہیں جبکہ مصطفی کمال نے میڈیا سے مختصر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ 2 سے 3 گھنٹوں میں صورتحال واضح ہو جائے گی۔ 
قبل ازیں ایم کیو ایم پاکستان کی رابطہ کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں بیشتر اراکین رابطہ کمیٹی نے بلدیاتی انتخابات میں بھرپورحصہ لینے کی تجویز دی۔ بہادرآباد مرکز میں ہونے والے رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں کراچی اور آباد میں کل کروائے جانے والے الیکشن کمیشن کے فیصلے پر غور کیا گیا۔
ترجمان ایم کیو ایم کا کہنا تھا کہ اجلاس میں جعلی حلقہ بندیوں کے موقف سے پیچھے نہ ہٹنے کا فیصلہ کیا گیا جبکہ رابطہ کمیٹی نے وزراءکے استعفوں اور دیگر آپشن پر مشاورت بھی شروع کر دی ہے۔ 
ایم کیو ایم کا کہنا تھا کہ جعلی حلقہ بندیوں کے خلاف کسی بھی حد تک جا سکتے ہیں، حلقہ بندیوں کی درستگی کیلئے وفاقی اور صوبائی حکومتوں سے حتمی رابطوں کا فیصلہ کیا گیا جبکہ اجلاس میں ہونے والے فیصلوں کا جلد اعلان کیا جائے گا۔ 

تبصرے بند ہیں.