آئینی اختیار کے تحت وزیراعلیٰ پنجاب کو اعتماد کا ووٹ لینے کی ہدایت کی: گورنر پنجاب

3

لاہور: گورنر پنجاب کا بلیغ الرحمان نے کہا ہے کہ وزیراعلیٰ پنجاب کو آئینی اختیار کے تحت اعتماد کا ووٹ لینے کی ہدایت کی اور پھر عملدرآمد نہ ہونے پر ڈی نوٹیفائی کیا جبکہ عدالت کے فیصلے کا احترام کریں گے۔ 
تفصیلات کے مطابق گورنر ہاو¿س پنجاب میں یوم قائد اور کرسمس کے حوالے سے منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے گورنر پنجاب کا کہنا تھا کہ قانون اور آئین کی بالادستی کے بغیر ملک آگے نہیں بڑھ سکتا اور پاکستان مسلم لیگ (ن) آئین و قانون کی بالادستی پر یقین رکھتی ہے۔ 
انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت میں آئینی طریقے سے تبدیلی آئی جبکہ وزیراعلیٰ پنجاب کو بھی آئینی اختیارات استعمال کرتے ہوئے اعتماد کا ووٹ لینے کی ہدایت کی جس پر عملدرآمد نہ ہونے پر آئینی اختیار کے تحت انہیں ڈی نوٹیفائی کیا، عدالت کے فیصلے کا احترام کریں گے۔ 
گورنر پنجاب کا کہنا تھا کہ پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) نے آئینی حق استعمال کرتے ہوئے ملک کو بحرانوں سے بچانے کیلئے حکومت بنانے کا فیصلہ کیا، دن رات بھرپور محنت کر کے ملک کو ایک بار پھر ترقی کی راہ پر گامزن کریں گے اور عوام کو خوشحال بنائیں گے۔ 
مسلم لیگ (ن) کے رہنماءنے کہا کہ بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح نے ہمیشہ آئین اور قانون کی بالادستی کی بات کی، ملک کی ترقی اور استحکام کیلئے ضروری ہے کہ اقلیتوں کو ساتھ لے کر چلیں، قائد اعظم کی ولولہ انگیز قیادت کی وجہ سے ایک آزاد مملکت کا حصول ممکن ہوا جبکہ ان کے رہنما اصول ایمان،اتحاد تنظیم ہمارے لئے مشعل راہ ہیں۔

تبصرے بند ہیں.