پاکستانیوں کیلئے خوشخبری، کینیڈا نے غیر ملکیوں کیلئے 14 لاکھ نئی ملازمتوں کا اعلان کردیا 

124

 

اوٹاوا: پاکستانیوں سمیت غیرملکیوں کے پاس کینیڈین شہریت لینے کا سنہری موقع ہے۔ کینیڈا اگلے تین سال میں 14 لاکھ تارکین وطن کو ملازمتیں دے گا۔

 

میڈیا رپورٹس کے مطابق کینیڈین شہری اپنی ملازمتوں سے سبکدوش ہو رہے ہیں تو کینیڈا کو اپنا ملک چلانے کیلئے غیر ملکیوں کی ضرورت آن پڑی ہے جبکہ نیا پروگرام پناہ گزینوں کی دوبارہ آباد کاری کو بڑھانے کی کوشش بھی ہے جو اس وقت حکومتی امداد پر منحصر ہیں ۔

 

کینیڈا کی جانب سے آئندہ تین برس میں 14 لاکھ تارکین وطن کو خوش آمدید کہنے کے منصوبے کا افتتاح کر دیا گیا ہے۔ امیگریشن کے وزیر شان فریزر نے کہا کہ کینیڈا 2023میں 465,000نئے مستقل باشندوں کو اپنے ملک میں خوش آمدید کہے گا۔ جبکہ 2024میں چار لاکھ پچاسی ہزار اور 2025میں پانچ لاکھ مزید افراد مستقبل رہائش کیلئے کینیڈا میں انٹری کریں گے۔

 

شان فریزر کا کہنا تھا کہ تارکین وطن کو اپنے ملک میں بسانے کے کینیڈا کی حکومت کے ابتدائی اہداف میں تقریبا 13 فیصد کا اضافہ ہوا ہے ۔ کینیڈا کو مزید لوگوں کی ضرورت ہے، کینیڈا کے اس اقدام کا بنیادی مقصد تمام محکموں میں ملازمتوں کی موجودہ کمی کو پورا کرنا ہے۔ کینیڈا کے مختلف محکموں میں ہزاروں ملازمتیں دستیاب ہیں جو خالی پڑی ہیں۔

 

انہوں نے کہا کہ کینیڈا میں نئے امیگریشن پلان کے ذریعے مختلف شعبہ جات کے لیے ملازمین کو تلاش کرنے میں مدد ملے گی، جن میں تعمیرات، مینوفیکچرنگ، ہوٹل اور سیاحت سمیت کئی شعبے شامل ہیں ، جس میں ریستوران کی صنعت بھی شامل ہیں،انہوں نے کہا کہ وہ فرنٹ لائن ہیلتھ کیئر ورکرز، ٹرک ڈرائیور، گھر بنانے والے یا سافٹ ویئر انجینئرز بھی ہو سکتے ہیں۔

تبصرے بند ہیں.