دفعہ 144 کی خلاف ورزی کیس میں عمران خان و دیگر رہنماؤں کی ضمانت میں توسیع

10

اسلام آباد: وفاقی دارالحکومت اسلام آباد کی مقامی عدالت نے دفعہ 144 کے مقدمہ میں پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان، اسد عمر ،اسد قیصراور فیصل واوڈا کی عبوری ضمانت میں 27 ستمبر تک توسیع کر دی ہے۔ 
تفصیلات کے مطابق ایڈیشنل سیشن جج ظفراقبال نے عمران خان سمیت دیگر پی ٹی آئی رہنماؤں کی ضمانتوں کی درخواست پرسماعت کی جس دوران مذکورہ رہنماؤں کے وکلاءنے آج حاضری سے استثنیٰ کی درخواست جمع کرائی۔ 
جج نے استفسار کیا کہ باقی ملزمان شہریار آفریدی، راجہ خرم، علی نواز اورفیصل جاوید کہاں ہیں؟ جس پر عمران خان کے وکیل بابراعوان نے بتایا کہ مقدمہ اور دلائل ایک جیسے ہی ہوں گے، جج نے مقدمہ کے ریکارڈ سے متعلق پوچھا تو تفتیشی افسر نے بتایا کہ ریکارڈ بھی موجود ہے اور تفتیش بھی مکمل ہے۔
وکیل بابراعوان نے مزید کہا کہ عمران خان 9 حلقوں سے الیکشن لڑ رہے ہیں اور ضمنی انتخابات 25 ستمبر کو ہو رہے ہیں، تھانہ آبپارہ میں درج مقدمہ میں دفعات قابل ضمانت ہیں، عمران خان کے خلاف یہ 21 واں مقدمہ ہے جس میں ضمانت لے رہے ہیں۔ 
بابراعوان نے کہا کہ اسد عمر اور سینیٹر سیف اللہ نیازی اس وقت اسلام آباد میں نہیں تھے، جج نے تفتیشی سے کہا کہ دیکھ لیں کوئی شامل نہیں تھا اس کو مقدمہ سے فارغ کریں، عدالت نے تمام ملزمان کی ضمانتوں میں 27 ستمبرتک توسیع کر دی۔

تبصرے بند ہیں.