شہباز گل کی گرفتاری کے بعد کیا حکمت عملی ہوگی؟ عمران خان کی زیر صدارت اجلاس میں اہم فیصلے 

26

 

اسلام آباد: چیئرمین تحریک انصاف کی زیر صدارت مرکزی قیادت اور قانونی ٹیم کا  اجلاس ختم ہو  گیا ہے ۔ عمران خان کہتے ہیں حکومت فاشزم پر اتر آئی ہے ۔سیاسی کارکنان کے ساتھ غیر جمہوری رویہ اختیار کیا جا رہا ہے۔

 

شہباز گل کی گرفتاری  کے بعد عمران خان کی زیر صدارت ہنگامی اجلاس  بنی گالہ میں ہوا ۔ اجلاس میں  فیصل چودھری اور علی بخاری  پر مشتمل قانونی ٹیم بھی شریک  ہوئی ۔ اجلاس میں ڈاکٹر شہباز گل کی گرفتاری،موجودہ صورتحال اور 13 اگست کے جلسے کے حوالے سے غور اور پی ٹی آئی کی حکمت عملی پر مشاورت  کی گئی۔

 

اجلاس میں عمران خان سمیت پی ٹی آئی قیادت  نے شہباز گل کی گرفتاری کی مذمت کی اور فیصلہ کیا گیا کہ عدالت سے رجوع  کیا جائے گا ۔ فیصل چودھری شہباز گل کے مقدمے میں معاونت کریں گے، شہباز گل کی گرفتاری اور طبی معائنے کے حوالے سے متعلقہ تھانے سے تفصیلات طلب کرلی گئی ہیں۔ اس حوالے سے درخواست علی اعوان کی جانب سے تیار کی گئی ہے۔

 

اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے کہا کہ 13 اگست کا جلسہ ہر صورت ہوگا، بھرپور تیاری کریں، انکا کہنا تھا کہ حکومت کے اس فاشسٹ رویہ کوکسی صورت برداشت نہیں کریں گے۔عوام کی طاقت ہمارے ساتھ، کسی سے ڈرنے والے نہیں۔ امپورٹڈ حکومت کے دن گنے جا چکے ہیں۔

تبصرے بند ہیں.