چائلڈ پورنو گرافی ثابت، مجرم کو 29 سال قید اور 21 لاکھ روپے جرمانہ کی سزا

10

اسلام آباد: چائلڈ پورن گرافی کے مقدمہ میں ملوث ملزم پر جرم ثابت  ہونے پر  مجرم محمد اسحاق کو  مجموعی طور پر 29 سال قید کی سزا  اور 21 لاکھ روپے جرمانہ کی سزا کا  حکم سنادیا گیا۔

 

تفصیلات کے مطابق ایڈیشنل سیشن جج ہمایوں دلاور نے مجرم محمد اسحاق کو مجموعی طور 29 سال قید کی سزا سنا دی ، مجرم محمد اسحاق کو مجموعی طور پر 21 لاکھ روپے جرمانہ کی سزا کا بھی حکم سنایاگیا،مجرم محمد اسحاق کو بدفعلی کی دفعہ 377.بی میں 14 سال قید دس لاکھ جرمانہ عائد کیا گیا ،مجرم کو چائلڈ پورن گرافی کی دفعہ 292 بی میں بھی 14 سال قید دس لاکھ جرمانہ کی سزا سنائی گئی ،مجرم کو ویڈیوز دکھانے کی دفعہ 292 اے میں ایک سال قید ایک لاکھ جرمانہ عائد کیا گیا ۔

 

واضح رہے کہ مجرم محمد اسحاق نے چار بچوں کے ساتھ زیادتی کے بعد ویڈیوز بنائی تھیں،مجرم محمد اسحاق نے دانش افتخار کو میموری کارڈ دے کر ویڈیوز دیکھنے کا کہا تھا۔گولڑہ پولیس نے 29 جون 2020 کو ملزم کے خلاف مقدمہ درج کیا تھا۔

تبصرے بند ہیں.