اپوزیشن نے پی ٹی آئی کو مصالحت کی پیشکش کر دی

510

اسلام آباد: متحدہ اپوزیشن پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کی جانب سے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کو مصالحت کی پیشکش کر دی گئی ہے۔ 
نجی ٹی وی کے مطابق قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف اور پاکستان مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف نے جمعرات کو ڈپٹی سپیکر رولنگ کیخلاف ازخود نوٹس کیس میں سپریم کورٹ کا فیصلہ ہی پی ٹی آئی کو مصالحت کی پیشکش کی تاکہ انتخابی اصلاحات میں تمام سیاسی جماعتوں کی مرضی شامل کی جا سکے۔ 
ذرائع کا کہنا ہے کہ شہباز شریف نے اپوزیشن رہنماؤں سے مشاورت کے بعد یہ پیشکش کی ہے جو صرف انتخابی اصلاحات تک محدود ہے لیکن اگر پی ٹی آئی قیادت کی جانب سے کسی اور ضمن میں بھی تعاون پر رضامندی کا اظہار کیا گیا تو اس پر بعد میں غور و فکر کیا جائے گا۔ 
ذرائع نے یہ دعویٰ بھی کیا ہے کہ سپریم کورٹ کی جانب سے فیصلہ آنے کے بعد وزیراعظم پاکستان عمران خان قومی اسمبلی میں تحریک عدم اعتماد پر ووٹنگ سے قبل آج ہی مستعفی ہو سکتے ہیں جبکہ پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنماءاور سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار رواں ماہ کے آخر تک وطن واپس پہنچیں گے۔ 
واضح رہے کہ گزشتہ روز سپریم کورٹ کے پانچ رکنی لارجر بینچ نے قومی اسمبلی کے ڈپٹی سپیکر قاسم سوری کی وزیراعظم پاکستان عمران خان کیخلاف تحریک عدم اعتماد پر دی گئی رولنگ کیخلاف ازخود نوٹس کیس کا فیصلہ سناتے ہوئے اسے کالعدم قرار دے کر اسمبلیاں بحال کیں۔ 
عدالت نے اپنے فیصلے میں وزیراعظم پاکستان عمران خان کیخلاف 9 اپریل بروز ہفتہ تحریک عدم اعتماد پر ووٹنگ کرانے کا حکم دیا اور کہا کہ اس کی کامیابی کی صورت میں اسی روز نئے وزیراعظم کا انتخاب بھی کیا جائے۔ 

تبصرے بند ہیں.