تحریک عدم اعتماد تک وزیر اعظم کا پارٹی کارکنوں کو اہم ہدایات جاری

58

اسلام آباد:وزیراعظم نے پارٹی رہنماؤں کو اتحادیوں سے متعلق بیان بازی سے روک دیا۔ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیراعظم اتحادی جماعتوں کے رہنماؤں سے ملاقات کریں گے ۔

وزیراعظم کا کہناہے اتحادیوں سے متعلق معاملات کو افہام و تفہیم سے دیکھا جائیگا،نہ حکومت کہیں جا رہی نہ اتحادی کہیں جا رہے ہیں۔

دوسری جانب وفاقی وزیر اسد عمرنے آج پھر اتحادیوں کو تنقید کا نشانہ بنایا،تقریب سے خطاب میں وفاقی وزیر اسد عمر نے مسلم لیگ ن کو جی ٹی روڈ ، پیپلزپارٹی اندرون سندھ ،ق لیگ کو پنجاب کے چند اضلاع کی پارٹی قرار دے دیا۔

واضح پریس کانفرنس کرتے ہوئے وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات فواد چوہدری نے کہا کہ فضل الرحمن، زرداری اور شہباز شریف نے شیروں کو جگا دیا ہے، اپوزیشن تحریک عدم اعتماد نہ لاتی تو ہم ایسے ہی سوئے رہتے، آپ ا پوزیشن کو ہاتھ ملتا دیکھیں گے اور یہ 3 جوکر پھر کبھی نظر نہیں آئیں گے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کور کمیٹی اجلاس کے بعد میڈیا بریفنگ میں فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ ہم کوئی چار ڈویژنز کی پارٹی نہیں ہیں بلکہ صرف تحریک انصاف ہی واحد وفاقی جماعت ہے۔ کور کمیٹی کے اجلاس میں سیاسی امور پر غور کیا گیا جبکہ کمیٹی نے وزیراعظم پر مکمل اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے تمام فیصلوں کا اختیار انہیں سونپ دیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ اجلاس میں اپوزیشن کی جانب سے لوگوں کو خریدنے کی مذمت کی گئی، ہمارے ارکان اسمبلی کو خریدنے کی کوشش کی جا رہی ہے اور تین ارکان کو پیسوں کی پیشکش ہوئی ہے، تحریک انصاف میں کوئی منحرف نہیں اور ہم چاہتے ہیں کہ ووٹنگ کیلئے جلد سے جلد اجلاس ہو کیونکہ آپ اپوزیشن کو ہاتھ ملتے دیکھیں گے۔

تبصرے بند ہیں.