دنیا کے آلودہ ترین شہروں میں لاہور ایک بار پھرسرفہرست

56

لاہور: صوبائی دارالحکومت لاہور  آج دنیا میں آلودہ ترین شہروں میں ایک بار پھر پہلے نمبر پر آگیا۔ ماضی میں ”باغوں کا شہر” کہلانے والے شہر کی حالت دگرگوں ہے۔ بزدار حکومت سڑکوں سے کوڑا کرکٹ تک اٹھانے میں ناکام ہو چکی ہے۔
پنجاب کے دیگر شہر وں گوجرانوالہ، فیصل آباد اور بہاولپور   میں بھی فضا میں آلودگی کی مقدارزیادہ ہے تاہم لاہور کی صورتحال زیادہ پریشان کن ہے۔ لاہور کا ائیر کوالٹی انڈیکس آج جمعرات کو 233 ریکارڈ کیا گیا،  ایئر کوالٹی انڈکس کے مطابق اگر زہریلے زرات کی فضا میں مقدار ایک سو اکیاون سے دو سو درجے تک تو یہ انسانی صحت کیلئے مضر ہوتے ہیں جبکہ تین سو ایک تک انھیں خطرناک تصور کیا جاتا ہے۔
ایئر کوالٹی انڈکس کے مطابق صفر سے پچاس تک ہوا کا معیار تسلی بخش ہوتا ہے۔ فضا کی یہ مقدار آلودگی سے پاک قرار دی جاتی ہے۔ اس کے علاوہ پچاس سے سو تک فضائی معیار کو قابل قبول قرار دیا جاتا ہے۔ طبی ماہرین کی جانب سے ایسے افراد  جو  دمے کے مرض میں مبتلا ہوں، انھیں احتیاط برتنے کا مشورہ دیا جاتا ہے۔

  

تبصرے بند ہیں.