بھارت میں فضائی آلودگی پر سپریم کورٹ برہم ، حکومت سے پلان مانگ لیا

61

نئی دہلی : بھارتی سپریم کورٹ نے بڑھتی فضائی آلودگی پر قابو پانے کے لئےشہر میں دوروز کے لئے لاک ڈاؤن کی تجویزدے دی جبکہ حکومت سے ایمرجنسی پلان بھی طلب کرلیا ۔

تفصیلات کے مطابق بھارت میں بڑھتی ہوئی فضائی آلودگی کا سپریم کورٹ نے نوٹس لے لیا بھارتی حکومت نے فضائی آلودگی کو کم کرنے کے لئے شہر میں دوروز ہ لاک ڈاؤن کی تجویز دے دی  ۔

بھارتی چیف جسٹس این وی رمانا نے ریمارکس دیئے کہ نئی دہلی اور اس کے قریبی شہر ایک ہفتے سے اسموگ کی لپیٹ میں ہیں، آپ دیکھیں صورتحال کتنی خراب ہے، ہمیں اپنی گھروں میں بھی ماسک کا استعمال کرنا پڑرہا ہے، مرکزی حکومت اس سلسلے میں ترجیحی بنیادوں پر ایمرجنسی پلان تشکیل دے۔

بھارتی چیف جسٹس نے ریاست نئی دہلی اور مرکزی حکومت کی جانب سے جمع کرائے گئے جواب پر کہا کہ حکام نے بتایا کہ وہ ایمرجنسی اقدامات اٹھانے کے لیے کیا منصوبہ بندی کرتے ہیں، کیا دو روز کا لاک ڈاؤن لگادیں؟ ائیر کوالٹی انڈیکس کی بہتری کے لیے حکومت کے پاس کیا منصوبہ بندی ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق ریاستی حکومت نے عدالت میں جمع کرائے گئے جواب میں اعتراف کیا ہےکہ نئی دہلی کی فضا میں سانس لینا روزانہ 20 سیگریٹس پینے جیسا ہے لیکن ہم صورتحال کی بہتری کے لیے تیار ہیں۔

عدالت نے ریاستی حکومت سے سوال کیا کہ نئی دہلی میں آلودگی کو کنٹرول کرنے کے لیے کیا جارہا ہے؟ حکومت اس سلسلے میں فوری طور پر اپنے پلان سے آگاہ کرے ۔

تبصرے بند ہیں.