دیوالی کے پٹاخوں نے نئی دہلی کو آلودہ ترین بنا دیا

116

نئی دہلی: بھارت میں  دیوالی کے موقع پر چلائے گئے پٹاخوں نے  دارلحکومت کو آلودہ ترین شہر بنادیا ۔عالمی ادارہ صحت نےدہلی شہر کو 15 گنا زیادہ آلودہ قراردے دیا ۔

تفصیلات کے مطابق بھارتی دارالحکومت نئی دہلی گزشتہ روز شدید اسموگ کی لپیٹ میں تھا۔   دیوالی کے باعث  ملک بھر میں چلائے گئے پٹاخوں کی وجہ سے

شہر کی فضا آلودہ اورآسمان میں بارود کی بورچی ہوئی تھی ۔ عالمی اداروں کے مطابق  رواں سال میں آلودگی کی یہ شرح سب سے زیادہ ہے۔ جو صحت مند لوگوں کے لیے بھی سانس لینے میں دشواری کا باعث بن سکتی ہے۔

رپورٹس کے مطابق نئی دہلی میں تمام عالمی دارالحکومتوں  کی نسبت  ہوا کا معیار سب سے خراب ہے۔ اس کے باوجود یہاں دیوالی کا تہوار پٹاخے بجا کر اور آلودگی پھیلا کر کیاگیا۔بھارت کی  اعلیٰ ترین عدالت نے دہلی میں پٹاخوں کی فروخت پر پابندی لگا رکھی تھی اور حکام نے عوام سے اپیل کی تھی کہ وہ اس بار دیوالی بم پٹاخوں کے بغیر منائیں تاہم اس پر عوام نے کوئی نوٹس نہیں لیا ۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ تقریباً 20 ملین آبادی والے شہر میں جمعہ کو پی ایم 2.5 کی اوسط 706 مائیکرو گرام تھی۔ جب کہ عالمی ادارہ صحت 5 مائیکرو گرام کی سالانہ اوسط سے زیادہ غیر محفوظ سمجھتا ہے۔

واضح رہے کہ فضائی آلودگی کے اعتبار سے دنیا کےآلودہ ترین  30 شہروں میں  بھارت  22 ویں نمبر پر ہے ۔

تبصرے بند ہیں.