نوجوت سنگھ سدھو نے اپنا استعفیٰ واپس لے لیا

87

چندی گڑھ: سابق بھارتی کرکٹر نوجوت سنگھ سدھو نے پنجاب کانگریس کے سربراہ کی حیثیت سے اپنا استعفیٰ واپس لے لیا ہے۔

وزیراعظم عمران خان کے قریبی دوست سمجھے جانے والے نوجوت سنگھ سدھوکا کہنا ہے کہ ریاستی سربراہ کی حیثیت سے خدمات انجام دیتا رہوں گا، نئے اٹارنی جنرل کی تقرری کے وقت چارج سنبھالوں گا، ان کا کہنا تھا کہ استعفیٰ ذاتی انا کا معاملہ نہیں تھا بلکہ ہر پنجابی کے مفاد کا تھا۔

یاد رہے نوجوت سنگھ سدھو نے 28 ستمبر کو اپنا استعفٰی کانگریس کی صدر سونیا گاندھی کو بھجوایا تھااور انہوں نے کانگریس کی عبوری صدر سونیا گاندھی کو بھیجے گئے اپنے استعفیٰ میں لکھا تھا کہ ایک انسان کے کردار کا زوال سمجھوتے سے شروع ہوتا ہے جبکہ میں پنجاب کے مستقبل اور بھلائی کے ساتھ کبھی سمجھوتہ نہیں کر سکتا۔

استعفٰی میں ان کا مزید کہنا تھا کہ ایسے میں، میں پنجاب کانگریس صدر کے عہدے سے استعفیٰ دیتا ہوں۔ میں کانگریس کے لئے کام کرتا رہوں گا۔

یاد رہے ایک ماہ قبل بھارت میں کسانوں کے پر امن احتجاج میں 8 افراد ہلاک کرنے پر احتجاج کے دوران نوجوت سنگھ سدھو، پریانکا گاندھی سمیت متعدد رہنماوں کو حراست میں لیا گیا تھا۔

تبصرے بند ہیں.