نواسہ رسولﷺ حضرت امام حسینؓ کی عظیم قربانی، ملک بھر میں آج یوم عاشور منایا جا رہا ہے

154

لاہور: نواسہ رسول ﷺ حضرت امام حسین رضی اللہ تعالی عنہ اوران کے ساتھیوں کی اسلام کی راہ میں دی گئی عظیم قربانی کی یاد میں یوم عاشور کل 10 ویں محرم الحرام کو مذہبی عقیدت و احترام کیساتھ منایا جا رہا ہے۔ لاہور میں شبیہ ذوالجناح کا مرکزی جلوس نثار حویلی سے برآمد ہوا جو اپنے روائتی راستوں پر رواں دواں ہے۔ 
یوم عاشور کے موقع پر ملک کے تمام چھوٹے بڑے شہروں، قصبوں میں ذوالجناح اور تعزئیے کے جلوس برآمد ہو رہے ہیں۔ نثار حویلی میں یوم عاشور کی مرکزی مجلس عزا بپا کی گئی جس میں شہدائے کربلا کی عظیم قربانیوں کو یاد کرتے ہوئے سوزو سلام پیش کیا گیا اور پھر نثار حویلی سے یوم عاشور کا مرکزی جلوس رات گئے برآمد ہوا جو اپنے روائتی راستوں پر رواں دواں ہے اور اس میں ہزاروں عزادار شریک ہیں، جلوس اندرون شہر کی 100 سے زائد امام بارگاہوں سے ہوتا ہوا مسجد وزیر خان پہنچے گا اور پھر کربلا گامے شاہ پہنچ کر اختتام پذیر ہو گا۔ 
مرکزی جلوس چوہٹہ مفتی باقرسمیت اندرون شہر کی 100سے زائد امام بارگاہوں سے ہوتا ہوا مسجد وزیر خان پہنچے گا، مسجد محلہ شیعاں میں اذان علی اکبر سے عاشورہ کے دن کا آغاز ہو گا، جلوس کشمیری بازار، سنہری مسجد، چوک رنگ محل، پانی والا تالاب، ٹبی سٹی اور بھاٹی گیٹ سے ہوتا ہوا کربلا گامے شاہ پر اختتام پذیر ہو گا، جہاں شام غریباں برپا ہو گی۔ 
کراچی میں یوم عاشور کی مرکزی مجلس نشتر پارک میں منعقد ہوئی جس کے بعد مرکزی جلوس برآمد ہوا، جو اپنے مقرر کردہ روایتی راستوں سے ہوتا ہوا شاہ خراشاں پر اختتام پذیر ہو گا اور کوئٹہ میں یوم عاشور کا مرکزی جلوس علمدارروڈ سے برآمد ہو گا جبکہ راولپنڈی میں مرکزی جلوس تیلی محلہ امام بارگاہ عاشق حسین سے صبح 11 بجے برآمد ہو گا۔ 
یوم عاشور کے موقع پر امن و امان کی صورتحال کو برقرار رکھنے کیلئے وفاقی اور صوبائی حکومتوں کی جانب سے سیکیورٹی کے فول پروف انتظامات مکمل کر لئے گئے ہیں جن کے تحت ماتمی جلوسوں کے روٹس اور اطراف میں موبائل فون سروس معطل رہے گی جبکہ موٹر سائیکل کی ڈبل سواری پر بھی پابندی ہو گی، امن وامان کو یقینی بنانے کی غرض سے حساس علاقوں میں پولیس کے ساتھ پاک فوج، رینجرز اور ایف سی کے دستے بھی حفاظتی ڈیوٹیوں پر تعینات ہیں۔ 
 جلوس کے راستوں میں بغیر اجاز ت پانی اور دودھ کی سبیلیں لگانے اور نیاز تقسیم کرنے کی اجازت نہیں ہو گی اور جلوسوں کے راستوں میں آنے والے تجارتی مراکز اور رہائش گاہوں کی جامع تلاشی کے بعد ان کی چھتوں پر بھی سیکیورٹی اہلکار تعینات کئے گئے ہیں۔ 
یوم عاشور پر امن و امان کی صورتحال کو برقرار رکھنے کیلئے امام بارگاہوں، مساجد، عبادت گاہوں اور مزارات کی سیکیورٹی بھی سخت کر دی گئی ہے جبکہ تمام سرکاری ہسپتالوں میں ایمر جنسی نافذ ہے اور تمام ایم ایس صاحبان کو ڈاکٹروں اورپیرا میڈیکل سٹاف کو الرٹ رکھنے اور ادویات کا متعلقہ سٹاک پورا رکھنے کی ہدایات بھی جاری کی گئی ہیں۔ 
قبل ازیں لاہور میں پانڈو سٹریٹ اسلام پورہ سے برآمد ہونے والا 9 محرم الحرام کا مرکزی جلوس خیمہ سادات سے واپس پانڈو سٹریٹ اسلام پورہ پہنچ کر اختتام پذیر ہوگیا، جلوس کی سکیورٹی کیلئے سخت انتظامات کئے گئے تھے، جلوس اسلام پورہ بازار اور سیکرٹریٹ سے ہوتا ہوا پرانی انارکلی چوک پہنچا جہاں نماز مغربین ادا کی گئی، نماز کے بعد شرکا امام بارگاہ خیمہ سادات روانہ ہو گئے۔ 

تبصرے بند ہیں.