یوم آزادی پاکستان، مزار قائد اور مزار اقبال پر گارڈز کی تبدیلی

157

کراچی: یوم آزادی کے موقع پر مزار قائد اور مزار اقبال پر گارڈز کی تبدیلی کی تقریب ہوئی ، فضا پاکستان زندہ باد کے نعروں سے گونجتی رہی ۔

تفصیلات کے مطابق مزار قائد پر گارڈز کی تبدیلی کی تقریب ہوئی ، پاکستان نیول اکیڈمی کے کیڈٹس اور پاک بحریہ کے سیلرز نے اعزازی گارڈ کے فرائض سنبھال لیے ۔ مزار اقبال پر پاکستان رینجرز کی جگہ پاک فوج کے چاک وچوبند دستے نے اعزازی گارڈ کے فرائض سنبھال لیے ۔ گارڈز کی تبدیلی کی تقاریب میں پاکستان سے محبت کے نعرے گونجتے رہے ۔

واضح رہے کہ یوم آزادی کا آغاز ملکی سلامتی اور استحکام کیلئے دعاؤں سے ہوا ، وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں 31 جبکہ چاروں صوبائی دارالحکومتوں میں 21 ، 21 توپوں کی سلامی پیش کی گئی ۔

دوسری جانب وزیراعظم عمران خان اور صدر مملکت عارف علوی سمیت دیگر سیاسی قائدین کی جانب سے قوم کو یوم آزادی کی مبارک باد پیش کی گئی ۔

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ اندرون ملک اور بیرون ملک تمام پاکستانی ، ملک کو قابل فخر ، خوشحال اور پُرامن ملک بنانے میں اپنا کردار ادا کریں ۔

صدر مملکت عارف علوی نے اپنے پیغام میں قوم کو یوم آزادی کی مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ ہمیں احساس ہے کہ کتنی مشکلات سے آزادی حاصل کی گئی ۔ اللہ نے مسلمانوں کو مشکل سے نکالا اور جینے کا حق دیا ۔

انہوں نے کہا کہ آزادی کے بعد مختلف حیلے بہانوں سے ہم پر 3 جنگیں مسلط کی گئیں ۔ برصغیر اور اس خطے میں اسلحے کی دوڑ شروع کر دی گئی ۔ ان حالات میں پاکستان کا جوہری طاقت بننا بڑی کامیابی ہے ۔

عارف علوی نے کہا کہ بھارت کو کہا گیا آؤ غربت کے خاتمے کیلئے مشترکہ کوششیں کرتے ہیں ۔ بھارت کو ایک بار پھر امن کی پیشکش کرتے ہیں ۔

وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے اپنے پیغام میں کہا کہ یوم آزادی دراصل یوم تشکر اور یوم تجدید عہد ہے ، تحریک پاکستان کے شہداء کی بے مثال قربانیوں کو سلام پیش کرتے ہیں ۔

 

 

 

 

تبصرے بند ہیں.