عبیداللہ کاسی کے قتل میں ملوث اغوا کار سی ٹی ڈی کارروائی میں ہلاک

170

کوئٹہ : بلوچستان کے ضلع پیشن میں سی ٹی ڈی نے  بڑی  کارروائی کی ہے جس میں  پانچ مبینہ اغواکار ہلاک ہوگئے ہیں۔

 

 ترجمان پولیس کے مطابق ہلاک افراد اے این پی کے رہنما عبید اللہ کاسی کے قتل میں ملوث تھے ملزمان کے قبضے سے اسلحہ  اور دستی بم برآمد ہوا ہے۔

 

  اے این پی کے رہنما ملک عبیداللہ کاسی کو 26 جون کو انکے آبائی علاقے کلی کتیر کچلاک سے مسلح افراد  نے اغوا کیا تھا۔ گزشتہ دنوں انکی لاش ضلع پشین کے علاقے سرانان سے برآمد کی گئی تھی، اغوا کاروں  نےانکے لواحقین سے بھاری تاوان کا مطالبہ بھی کیا تھا۔

 

سی ٹی ڈی ترجمان کا کہنا ہے کہ اغوا کاروں کو پشین میں ایک آپریشن کے دوران ہلاک کیا گیا ہے۔ملزمان کی شناخت ہو گئی ہے، پولیس نے مزید قانونی کارروائی شروع کردی ہے۔

 

 سی ٹی ڈی حکام کا کہنا ہے کہ ملزمان کے قبضےسے بھاری مقدار میں اسلحہ جس میں 2 سب مشین گنز ،2 پستول، اور 3 ہینڈ گرینڈ  برآمد ہوئے ہیں۔

 

ترجمان سی ٹی ڈی پولیس کا  مزید کہنا ہے کہ  قانون نافذ کرنیوالے اداروں نے سائنٹیفک انداز میں تحقیق کے بعد ایک اغوا کار جمعہ گل کو گرفتار کیاتھا۔

تبصرے بند ہیں.