images

بلاول ہماری امید، حکمران پھنسنے پر معافیاں مانگ کر باہر چلے جاتے ہیں۔خورشید شاہ

روہڑیٟ: اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ نے کہا ہے حکمراں پھنستے ہیں تو معافیاں مانگ کر باہر چلے جاتے ہیں جب کہ پہلے بھی غلط پالیسیوں کے باعث ملک دو لخت ہوا اور آج بھی نیا پاکستان اور تبدیلی کے نعرے لگائے جارہے ہیں۔ نیا پاکستان ذوالفقار بھٹو نے دیا تھا ۔بلاول بھٹو اپنے نانا کی سیاست آگے لے کر چلے گا۔ بلاول بھٹو ہماری امید ہیں۔ پاکستان کے خلاف بہت بڑی سازش ہو رہی ہے عالمی ممالک پاکستان کے مخالف ہیں انہوں نے جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا غلط پالیسیوں کی وجہ سے پاکستان ٹوٹ گیا ۔ ہم نے اپنی معیشت تباہ کر دی ۔ ایک آمر نے اس ملک سے بھٹو جیسا لیڈر چھین لیا۔پیپلزپارٹی وہ واحد جماعت ہے ہے جو اپنے پچاس سال پورے کر رہی ہے ۔ ہمارے لیڈروں اور کارکنوں نے جیلیں کاٹیں۔پیپلز پارٹی عوام کی خدمات کرنیوالی جماعت ہے ۔ ۔ بینظر بھٹو نے اپنا خوان دے کر جمہوریت کو زندہ رکھا ۔ انہوں نے کہا جمہوریت کے قاتل ضیاالحق نے دہشت گردی کی جو بنیاد ڈالی اس کے نتائج عوام آج بھی بھگت رہے ہیں۔ ہمارے بچے بے روزگاری کی چکی میں پس رہے ہیں، مزدور و کسان تباہ ہوچکے ہیں، کارخانے بند ہورہے ہیں عوام پریشان حال ہیں۔ انہوں نے کہا پہلے بھی غلط پالیسیوں کے باعث ملک دو لخت ہوا اور آج بھی تبدیلی اور نیا پاکستان کے نعرے لگائے جارہے ہیں، نیا پاکستان تو بہت پہلے بن چکا تھا اب اس ملک کو قائم رکھنا ہے۔
اپوزیشن لیڈر نے کہا کہ ڈکٹیٹر ضیاالحق کی غلط پالیسیوں کے باعث پاکستان دنیا کی دو بڑی طاقتوں سوویت یونین اور امریکا کی جنگ کا حصہ بنا اور ہم نے 35 لاکھ افغانیوں کو پناہ دی اور اپنے بچوں کی روٹی چھین کر انہیں کھانا کھلایا، ہماری معیشت تباہ ہوگئی، اربوں روپے کا خسارہ اٹھانا پڑا، قرضے لے لے کر ہم تباہی کے دھانے تک پہنچ چکے ہیں لیکن کوئی بھی اس بات کو سوچنے کو تیار نہیں کہ ہمارا مستقبل کیا ہوگا بس گالم گلوچ اور نعرے بازی کی سیاست کی جارہی ہے۔خورشید شاہ نے کہا ذوالفقارعلی بھٹو کو ایک سازش کے تحت شہید کیا گیا کیوں کہ دنیا کو پتہ تھا کہ اگر بھٹو زندہ رہا تو پاکستان نئی طاقت بن کر دنیا پر حکمرانی کرے گا، آخرہمارا کیا قصور تھا کہ ذوالفقار علی بھٹو کو بھی پیپلزپارٹی سے چھین لیا گیا۔ ذوالفقار بھٹو اور ان کی شہید بیٹی کے بعد پاکستان میں اب کوئی لیڈر نہیں رہا جو دنیا کو بتائے کہ ہم نے دہشت گردی کے خلاف کتنی قربانیاں دیں اور آج ہماری پوزیشن کیا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *