Imran-Khan-Defiant

قوم تیار ہوجائے, دوبارہ سڑکوں پر نکلنا پڑے گا۔ عمران خان

بونیر: تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے 2018 میں پورے پاکستان میں تبدیلی کا انقلاب آئے گا، قوم تیار ہوجائے لگتا ہے دوبارہ سڑکوں پر نکلنا پڑے گا۔
شاہدخاقان عباسی کٹھ پتلی وزیراعظم ہیں، ماضی میں کامیابی نہیں ملی لیکن اب بونیرپی ٹی آئی کاہوگاا ،شاہدخاقان کہتے ہیں کہ نوازشریف اب بھی میراوزیراعظم ہے،ایک آدمی کرپشن چھپانے کیلئے ادارے،ملک اورقوم کوتباہ کررہاہے، ۔ انہوں نے جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا پاکستان کی اسمبلی نے قانون منظور کیا ہے، جس کے تحت چور، ڈاکو اور جھوٹا شخص پارٹی کا سربراہ بن سکتا ہے، نواز شریف نے اس ملک پر صرف یہ ظلم نہیں کیا کہ پیسہ چوری کرکے باہر لے گئے اور ملک کے ادارے تباہ کردیے، بلکہ نواز شریف نے سب سے بڑا ظلم یہ کیا کہ قوم کی اخلاقیات کو تباہ اور قدریں پامال کردیں، قومیں بمباری اور جنگ میں شکست سے نہیں بلکہ اخلاقی شکست سے تباہ ہوتی ہیں۔انہوں نے کہا قومی اسمبلی نے پارٹی صدرکے انتخاب سے متعلق ایسا قانون پاس کیاجس کے تحت نااہل شخص بھی پارٹی صدر بن سکتا ہے،بونیرکے لوگوں، لگتاہے کہ ایک بارپھرسڑکوں پرنکلناہوگا،جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ قومیں کبھی بمباری یاشکست سے تباہ نہیں ہوتیںبلکہ اخلاقیات ختم ہونے سے تباہ ہوتی ہیں،کیا عوام نہیں جانتے کہ نوازشریف کوکیوں نکالا؟،نوازشریف کومنی لانڈرنگ پرسزاہوگئی توتمام جائیدادضبط،بینک اکاو¿نٹس بندہوجائینگے، ان کی ساری کوششیں منی لانڈرنگ کی سزاسے بچنے کےلئے ہیں،نوازشریف نے صرف ادارے تباہ نہیں کئے،قوم کی اخلاقیات بھی تباہ کیں۔انہوں نے اپنے خطاب میں مولانا فضل الرحمان کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا مولانافضل الرحمان اسلام کے نام پر سیاست کرتے ہیں ،فضل الرحمان کومولاناکہنا پسند نہیں کرتا،یہ اپنے ضمیرکی قیمت ڈیزل کے پرمٹ پرلگادیتے ہیںاورڈیزل دونوں کےساتھ فٹ ہوجاتاہے، جمہوریت میں میرٹ اوربادشاہت میں خون کارشتہ ہے،میرٹ کی بنیادپرجمہوریت نے بادشاہت کو شکست دی ۔چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ قوم تب اٹھتی ہے جب وہ اپنا کردارٹھیک کرتی ہے، جس قوم کے لیڈرصادق اورامین ہوں وہ عظیم قوم بنتی ہے،انہوں نے کہا کہ ملک سے پیساچوری کرکے باہربھیجاجارہاہے،قوم فیصلہ کرلے ہمیں ظلم کامقابلہ کرناہے اورکبھی کسی کرپٹ لیڈرکوحکومت میں نہیں آنے دینا،ہمیں عوام کے پیسے کی حفاظت کرنی ہے،عمران خان نے کہا کہ ہرسال ایک ہزارارب روپے منی لانڈرنگ سے باہرچلے جاتے ہیں اگرپیساباہرنہ جائے تویہاں فیکٹریاں،سکول اورہسپتال بن سکتے ہیں،اس وقت ہرپاکستانی پرایک لاکھ 30ہزارروپے کاقرضہ ہوگیاہے،چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ آصف زرداری اورنوازشریف قوم کے سب سے بڑے ڈاکوہیں،چوروں اورڈاکوو¿ں کی کرپشن کی قیمت عوام غربت سے اداکرتی ہے،زرداری اورنوازشریف کے آنے تک ہرپاکستانی پر35ہزارقرضہ تھا،اسحاق ڈاراوراس کے بچے بھی ارب پتی ہوچکے ہیں، جبکہ ملک میں45فیصدبچے خوراک کی کمی کی بیماریوں کاشکارہیں۔ انہوں نے کہا پیپلزپارٹی میں ذوالفقاربھٹوبڑے لیڈرتھے،انھوں نے جدوجہدکی،بینظیربھٹونے پیپلزپارٹی میں جدوجہدکی اورمشکلیں برداشت کیںان کے بعد پیپلزپارٹی میں میرٹ ہوتا بہتری آتی ۔ وبلاول اوراعتزازاحسن میں کیامقابلہ ہے مرادسعیدمیرٹ پراوپرآیا،میرٹ ہوتوبلاول بھٹو اورمرادسعید کا کوئی مقابلہ ہے،انہوں نے کہا کہ 4سال میں خیبرپختونخوامیں غربت آدھی ہوگئی،پرویزخٹک نے لوگوں کیلئے کچھ کیاہوگااسی لئے وہ تالیاں بجارہے ہیں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *