44444

ایل ایل بی کے تین سالہ پروگرام کے تحت شام کی کلاسز پر پابندی ختم

لاہورہائیکورٹ نے پرائیوٹ لاءکالجوں میں 3سالہ جاری ایل ایل بی پروگرام پر 5سالہ ایل ایل بی پروگرام کا اطلاق معطل کرتے ہوئے 3سالہ پروگرام کے تحت شام کی کلاسز پر پابندی بھی ختم کردی نچیف جسٹس منصور علی شاہ کی سربراہی میں تین رکنی فل بنچ نے سماعت شروع کی تو درخواست گزار طلباءکے وکیل نے موقف اختیارکیاکہ پاکستان بارکونسل کو قانونی تعلیمی معاملات میں مداخلت کا اختیارنہیں لیکن اس کے باوجود پاکستان بارکونسل کی سفارش پرپرائیوٹ لاءکالجز میں ایل ایل بی کا پروگرام 3سال سے بڑھا کر5سال تک کردیا جوغیرقانونی ہے جبکہ پرائیوٹ کالجز کی شام کی کلاسز پر پابندی رولز کی خلاف ورزی ہے ،درخواست گزار کے وکیل نے مزید کہا کہ 3سالہ پروگرام کے تحت شام کی کلاسوں میں طلباءزیرتعلیم تھے ،شام کی کلاسوں پر پابندی ان کے مستقبل سے کھیلنے کے مترادف ہے ۔پنجاب یونیورسٹی کے وکیل اویس خالد نے موقف اختیار کیاکہ متعدد لا ءلجز ایسے ہیں جن کایونیورسٹی سے الحاق نہیں ہے، ایل ایل بی پروگرام سے متعلق عدالتی حکم تسلیم کریں گے، فل بنچ نے پرائیوٹ لاءکالجز میں جاری 3سالہ پروگرام کے تحت شام کی کلاسز پر پابندی ختم کردی جبکہ پہلے سے جاری 3سالہ ایل ایل بی پروگرام پر 5سالہ پروگرام کا اطلاق معطل کردیا ہے،عدالت نے قرار دیا ہے کہ 5سالہ پروگرام کے تحت شام کی کلاسوں پر پابندی برقرار رہے گی

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *