download

ایران میں دہشت گردی، 12 افراد جاںبحق اور 42 زخمی ، چار دہشت گرد ہلاک

تہرانٟ:ایران میں دہشت گردی کے دو واقعات میں 12 افراد جاںبحق اور 42 زخمی ہوگئے ۔ پارلیمنٹ ہاؤس پر حملہ کرنے والے چاروں دہشتگردوں کو ہلاک کردیا گیا حملوں کی ذمہ داری داعش نے قبول کرلی ۔ دہشت گردی کے واقعات پارلیمنٹ اور امام خمینی کے مزار پر فائرنگ اور خودکش دھماکوں میں ہوئے ایرانی میڈیا کے مطابق صورتحال پر 4 گھنٹے بعد قابو پالیا گیا ۔ ۔ تفصیلات کے مطابق ایران کے دارلحکومت میں 4 مسلح حملہ آور پارلیمنٹ میں گھس گئے اور اندھا دھند فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں گارڈز سمیت متعدد افراد زندگی سے محروم ہو گئے ۔ ایرانی سرکاری میڈیا نے امدادی محکمے کے سربراہ پیرحسین قلیوند کے حوالے سے بتایا کہ دونوں حملوں میں 12 افراد شہید اور 42 زخمی ہوئے۔ ایرانی رکن اسمبلی نے سرکاری میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ چار مسلح افراد نے اسمبلی کی حفاظت پر تعینات گارڈ کو گولی مارنے کے بعد ارکان اسمبلی کو یرغمال بنانے کی کوشش کی۔ تاہم سیکورٹی فورسز نے جوابی کارروائی کرتے ہوئے حملہ آوروں کو گھیرے میں لے لیا۔ فائرنگ کا تبادلہ کئی گھنٹوں تک جاری رہا۔ اس دوران ایک حملہ آور نے اسمبلی کی چوتھی منزل پر اپنے آپ کو دھماکے سے اڑادیا جب کہ دیگر دہشت گرد فائرنگ کے تبادلے میں مارے گئے۔پارلیمنٹ پر حملے کے دوران ہی تہران کے جنوبی علاقے میں واقع آیت اللہ خمینی کے مزار پر دہشت گرد تخریبی کارروائی کے لئے متحرک ہو گئے ، جہاں 4 دہشتگردوں نے مزار کے احاطے میں حملہ کردیا۔ زائرین پر فائرنگ شروع کر دی ۔ ایک خود کش حملہ آور نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا۔ سیکیورٹی فورسز نے مزار سے 2 حملہ آوروں کو گرفتار کرلیا ، جبکہ ہلاک خودکش بمبار کے قبضے سے بھاری مقدار میں اسلحہ برآمد کیا گیا ہے۔ایرانی وزارت داخلہ کے مطابق کہ خود کش بمبار نے خاتون کا لباس زیب تن کیا ہوا تھا۔سیکیورٹی اہلکاروں نے مزار سے ایک بم کو ناکارہ بنادیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *