imran-khan-angry-700

نواز شریف کو جیل میں ڈالے بغیر چین سے نہیں بیٹھونگا۔ عمران خان

ایبٹ آباد: تحریک انصاف کے چئیرمین عمران خان نے کہا ہے حکمران کرپشن کے گاڈ فادر اور ڈاکو ہیں، نواز شریف کی اصل دولت کا جے آئی ٹی میں پتا چلے گا۔ نواز شریف کو جیل میں ڈالے بغیر چین سے نہیں بیٹھونگا۔ میں نے کوئی پیسہ نہیں چھپا یا سب میرے نام پر اورپاکستان میں ہے ۔ ڈان لیکس حکومت اور فوج کے درمیان کوئی تنازعہ نہیں تھا، یہ پاکستانیوں کا مسئلہ تھا، پاکستان کی فوج کو بدنام کرنے کی کوشش کی گئی تھی وزیر اعظم ہاوس سے نکلنے والی خبر میں نریندر مودی کی زبان استعمال ہوئی ۔ آئی ایم ایف کہتی ہے عوام پر چالیس ارب روپے کا مزید ٹیکس لگاو انہوں نے کالج گراونڈ میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا پاکستان میں مہنگائی، بے روز گاری اور غربت کی سب سے بڑی وجہ کرپشن ہے اور امریکی محکمہ خارجہ کے سروے کے مطابق پاکستان سے سالانہ ایک ہزار ارب روپے کی منی لانڈرنگ ہوتی ہے۔ 2013 میں نواز شریف نے بجلی کے نئے منصوبوں کے لئے 480 ارب روپے جاری کئے اور سینیٹ کی قائمہ کمیٹی میں یہ بات سامنے آئی کہ ان منصوبوں میں 62 ارب روپے کی کرپشن ہوئی جب کہ مزید 120 ارب روپے کی خرربرد کا بھی شبہ ہے، جب تک حکمرانوں کا احتساب نہیں ہو گا تو اس وقت تک ملک ترقی نہیں کر سکتا، ہمارا وزیراعظم کرپشن میں رنگے ہاتھوں پکڑا گیا ہے اور جب معاملہ سپریم کورٹ میں گیا تو وہاں قطری کا جھوٹا خط پیش کیا گیا، پاناما کیس کی جے آئی ٹی میں نواز شریف کی اصل دولت سامنے آ جائے گی اور جب ہماری حکومت آئی تو چھوٹے چوروں کو نہیں بڑے بڑے مگر مچھوں کو جیل میں ڈالیں گے۔ انہوں نے کہا کشمیری ایک عرصے سے بھارتی فوج کے ظلم و ستم سہہ رہے ہیں لیکن اس کے باوجود ان کا جذبہ اور حوصلہ دیکھ کر انہیں خراج تحسین پیش کرتے ہیں، سب سے زیادہ خوشی اس بات کی ہے کہ اب کشمیر کے اسکولوں کی بچیاں بھی آزادی مانگ رہی ہیں۔ جب ایک قوم کو شعور آ جاتا ہے کہ غلامی کیا ہے اور آزادی کیا ہے تو اس قوم کو کوئی بھی غلام نہیں بنا سکتا، اسی طرح جب ایک قوم کے نوجوانوں کو سمجھ آ جائے کہ حکمران کرپشن کر رہے تو عوام اس کے خلاف اٹھ کھڑے ہوتے ۔ عمران خان نے کہا جمیعت علمائے اسلام ٟفٞ کے سربراہ کو مولانا کہنا مولانا کی توہین سمجھتا ہوں۔ انہوں نے ایک بار پھر مولانا فضل الرحمان کو ڈیزل کا خطاب دیتے ہوئے کہا کہ ایک لیٹر ڈیزل کیلے 50 فیصد ٹیکس دینا پڑتا ہے انہوں نے کہا ۔ حکمران ہر سال عالمی بینک سے بھکاریوں کی طرح بھیک مانگتے ہیں۔ دوسری جانب دس ارب ڈالر سالانہ ملک سے باہر بھیج دیا جاتا ہے۔ جے آئی ٹی میں ابھی اور بہت کچھ سامنے آئے گا۔۔ نوازشریف کا لندن میں گھر ساڑھے 6 ارب روپے کا ہے۔ہ حسن نواز کے پاس ساڑھے 6 ارب روپے کا گھر کہاں سے آگیا؟۔۔۔ نوازشریف نے جائیدادیں بچوں کے نام پر رکھی ہوئی ہیں۔ انہوں نے کہا کرپٹ لوگوں کو جیل میں ڈالنے تک ملک ترقی نہیں کر سکتا،،نوازشریف کہتے ہیں کرپشن کے پیچھے جاؤں گا تو ترقی نہیں ہوگی نواز شریف جو کرپشن کے گاڈ فادر اور سردار ہیں وہ کس طرح سے کرپشن روک سکتے ہیں۔ اس ملک کو خطرہ اندر سے ہے باہر سے نہیں ہے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *